دنیاعربمشرق وسطییورپ

سعودی دار الحکومت پر پھر میزائل حملہ، پورا شہر دھماکے سے لرز اٹھا

Saudi Arabia

عینی شاہدین نے بتایا کہ انہوں نے دو بڑے دھماکوں کی آوازیں سنیں جس کے بعد آسمان میں دھواں اٹھتا دکھائی دیا۔

یہ واقعہ دوپہر ایک بجے کے قریب کا ہے۔

سعودی عرب کے ذرائع ابلاغ نے ایک ویڈیو کلپ منتشر کیا ہے جس میں دکھایا گیا ہے کہ دار الحکومت ریاض کے آسمان پر حملہ آور میزائل کو تباہ کر دیا گیا ہے لیکن عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ پورا واقعہ اس سے کہیں زیادہ وحشتناک تر محسوس ہوتا ہے۔

ابھی تک کسی گروہ نے اس حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔

سعودی عرب 2015 سے یمن پر حملے کر رہا ہے جس کا جواب یمن کی فوج اور تحریک انصار اللہ کی جانب سے بارہا دیا جاتا رہا ہے اور وہ ان حملوں کی ذمہ داری بھی قبول کرتی ہے تاہم یمن کی عوامی تحریک انصار اللہ نے اس بار کے حملوں میں اپنا ہاتھ ہونے سے انکار کیا ہے۔

سنیچر کو بھی سعودی دار الحکومت ریاض پر میزائل حملہ ہوا تھا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button