ایشیا

فوجی ہیلی کاپٹر سے بمباری 30 روہنگیائی مسلمان جاں بحق

میانمار کی ریاست راخین میں میانمار فوج نے روہنگیا کی آبادی پر حملہ کیا جس کے نتیجے میں 30 افراد جاں بحق اور متعدد زخمی ہوگئے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ نے کہا ہے کہ میانمار فوج کے ہیلی کاپٹر سے روہنگیا آبادی پر بمباری میں 30 روہنگیا مسلمانوں کے جاں بحق ہونے کا خدشہ ہے۔

اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کے ہائی کمشنر نے کہا کہ میانمار فوج کے حملے میں جاں بحق ہونے والوں کی درست تعداد جاننے کی کوشش کی جارہی ہے تاہم غیر مصدقہ طور پر 30 کے لگ بھگ ہلاکتوں کا خدشہ ہے۔

دوسری جانب میانمار حکومت نے صرف 6 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے میڈیا کو بتایا کہ واقعے میں 9 افراد زخمی بھی ہوئے ۔ یہ کارروائی شدت پسند جماعت ’اراکان آرمی‘ کے جنگجوؤں کی موجودگی کی اطلاع پر کی گئی۔

واضح رہے کہ ایک سال قبل میانمارکی فوج اور شدت پسند بدھ مت کے پیروکاروں نے روہنگیا مسلمانوں کا قتل عام کیا ان کی املاک نذرِآتش کیں اور خواتین کی عصمت دری کی جس کے بعد 7 لاکھ سے زائد روہنگیا مسلمانوں نے بنگلا دیشی سرحد پر بنائے گئے کیمپوں میں پناہ لی تھی ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button