انسانی حقوقترکیشاممشرق وسطی

ترکی کے حمایت یافتہ دہشتگردوں نے حسکہ کے عوام کے لئے پینے کے پانی کی پائپ لائن کاٹ دی

سوشل میڈیا پر سرگرم افراد نے الحسکہ کے عوام کے غم کو عالمی سطح پر پیش کرنے کے لئے حسکہ کو نجات دیں، حسکہ میں پانی نہیں ہے اور حسکہ تشنہ ہے، جیسے ہیش ٹیگ شروع کئے ہيں۔

ترکی کے حمایت یافتہ مسلح گروہوں نے کچھ دن پہلے حسکہ کے عوام کے لئے پینے کے پانی کی پائپ لائن کاٹ دی تھی۔

یہ پائپ لائن راس العین شہر کے نزدیک واقع ہے۔

اقوام متحدہ میں شام کے مستقل مندوب بشار جعفری نے اقوام متحدہ سے اس بارے میں مداخلت کرنے کا مطالبہ کیا ہے تاکہ الحسکہ کے عوام کے رنج و الم کو کم کیا جا سکے۔ ان کا الزام تھا کہ ترکی کے اشارے پر عام شہریوں کے لئے پانی بند کیا گیا ہے۔

ٹوئٹر پر سرگرم افراد نے اس واقعے کو تمام زندہ موجودات کا قتل عام قرار دیا ہے اور شام کے اس شہر کے 10 لاکھ عوام کو نجات دلانے کا مطالبہ کیا ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close