فلسطینمشرق وسطی

غزہ میں اسرائیل کا ڈرون طیارہ تباہ

فلسطین الیوم کے مطابق غزہ میں سکیورٹی ذرائع نے کہا ہے کہ کل رات غزہ کے فضائی حدود میں داخل ہونے پر غاصب صیہونی حکومت کے کواد کوپتر نامی ڈرون طیارے کو الشجاعیه کے قریب مار گرایا۔

اسرائیل، اس قسم کے ڈرون طیاروں کو تحریک مزاحمت کے بارے میں اطلاعات جمع کرنے اور اس کی نقل و حرکت کا پتہ لگانے کے لئے استعمال کرتا ہے۔

فروری کے مہینے میں بھی فلسطین کی تحریک مزاحمت نے غزہ میں پندرہ روز کے دوران صیہونی حکومت کے چار ڈرون طیارے مار گرائے تھے۔

واضح رہے کہ غاصب صیہونی حکومت اپنے توپ خانے، جنگی ہیلی کاپٹروں اور طیاروں نیز ڈرون طیاروں سے غزہ کے مختلف علاقوں کو جارحیت کا نشانہ بناتی رہتی ہے اور اس نے دسمبر2017 سے غزہ کے خلاف نئی جارحانہ کارروائیاں شروع کر رکھی ہیں جن میں اب تک ہزاروں کی تعداد میں فلسطینی شہید و زخمی ہو چکے ہیں۔

دوسری جانب  کل باوردی صیہونی دہشتگردوں نے مشرقی بیت المقدس میں مسجد الاقصیٰ کے صحن سے نماز کے بعد باہر آ رہے فلسطینیوں پر آنسو گیس اور سُن کرنے والی گیس کے گولوں سے دھاوا بول دیا۔ ذرائع کے مطابق اس ٹکراؤ میں کم از کم ۹ فلسطینی زخمی ہو گئے جبکہ متعدد کو غاصب صیہونیوں نے گرفتار کر لیا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button