ایشیاامام خامنہ ایایرانمثالی شخصیاتمشرق وسطی

رہبر انقلاب اسلامی سے وفاداری کا دن اور یوم بصیرت

ایران میں رائج ہجری شمسی کیلینڈر کی تاریخ نو دی مطابق 29 دسمبر یوم بصیرت کے موقع پر پورے ایران میں اسلامی انقلاب، اسلامی جمہوری نظام اور رہبر انقلاب اسلامی سے اعلان وفاداری کے لئے بڑی بڑی ریلیاں نکالی جاتی ہیں اور ایران کے با شعور عوام ایک بار پھر اسلامی جمہوری نظام اور رہبر انقلاب اسلامی سے اپنی وفاداری کا بھرپور اعلان کر کے دشمنوں اور ان میں سرفہرست امریکہ کے منہ پر زور دار طمانچہ رسید کرتے ہیں۔

11 سال قبل 2009 میں ایران کے صدارتی انتخابات کے بعد انقلاب اور اسلامی جمہوری نظام کے دشمنوں اور ان میں سرفہرست امریکہ نے ایران کے اندر فتنہ و فساد پیدا کرنے کی کوشش کی لیکن ایرانی عوام نے دشمنوں کے فتنوں پر گہری نگاہ رکھی اور آخرکار اپنی بھرپور بصیرت کا مظاہرہ کرتے ہوئے 29 دسمبر 2009 کو بھر پور طریقے سے پورے ملک میں عظیم الشان ریلیاں اور جلوس نکال کر اسلامی نظام، انقلاب اور رہبر انقلاب اسلامی سے اپنی وفاداری کا اعلان کر کے اسلامی انقلاب کی تاریخ میں ایک سنہرے باب کا اضافہ کیا اور دشمنوں کے فتنوں اور منصوبوں پر پھانی پھیر دیا ۔

بلاشبہ اگر رہبر انقلاب اسلامی کی عظیم بصیرت و درایت اور عوام کی حمایت و ہوشیاری نہ ہوتی اور ایرانی عوام ولایت فقیہ کے ہمراہ نہ ہوتے تو فتنے کی آگ اتنی جلدی خاموش نہ ہو پاتی۔ مگر اس حساس موقع پر رہبر انقلاب اسلامی کی گرانقدر تدبیر و بصیرت اور رہنمائی کے نتیجے میں پوری قوم دشمنوں کی جانب سے کھڑے کئے جانے والے فتنے میں گرفتار ہونے سے بچ گئی اور اپنی راہ جاری رکھنے کے لئے پر عزم رہی۔

قابل ذکر ہے کہ 9 دی ماہ مطابق 29 دسمبر کو ایران کے انقلابی عوام نے سڑکوں پر نکل کر ایران کی اسلامی و انقلابی تاریخ میں اس دن کو یادگار دن بنا دیا اور فتنے کی بساط لپیٹ کر رکھ دی۔ اس دن کے بعد اس تاریخ کو یوم بصیرت کا نام دیا گیا اور ہر سال اس موقع پر خاص تقاریب کا اہتمام کیا جاتا ہے، ملک کے سبھی شہروں میں ریلیاں اور جلوس نکالے جاتے ہیں۔

اس سال عالمی وبا کورونا کے باعث ملک گیر ریلیوں کا امکان فراہم نہیں ہو سکا ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button