عربمشرق وسطییورپ

ریاض نے اسرائیل اور اردن کو اپنے فضائی حدود استعمال کرنے کی اجازت دے دی

ابوظہبی کے ولی عہد کے سینئر مشیر نے کہا ہے اسرائیل اور متحدہ عرب امارات کے درمیان انجام پانے والی پروازیں سعودی عرب کے فضائی حدود کو استعمال کریں گی۔

صیہونی اخبار اسرائیل الیوم نے ابوظہبی کے ولیعہد کے سینئر مشیر کے حوالے سے رپورٹ دی ہے کہ اسرائیل اور متحدہ عرب امارات کے درمیان ابوظہبی اور تل ابیب میں ایک دوسرے کا سفارت خانہ کھلنے کے ساتھ ہی یہ بھی طے پایا ہے کہ اسرائیلی طیارے سعودی فضائی حدود استعمال کریں گے۔

متحدہ عرب امارات کے ولیعھد کے سینئر مشیر نے اپنا نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ بحرین اور عمان بھی رواں سال کے اختتام تک باہمی تعلقات کو معمول پر لانے کے معاہدے پر دستخط کر دیں گے۔صیہونی حکومت اور متحدہ عرب امارات کے درمیان تعلقات قائم کرنے کی امریکی صدر ٹرمپ کی کوششوں کے نتیجے میں جمعرات کو فریقین نے باہمی تعلقات کی استواری کے معاہدے پر دستخط کردئے۔

متحدہ عرب امارات کی اس حرکت کی اسلامی ممالک اور فلسطینی تنظیمیں سخت مذمت کر رہی ہیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close