ایرانمشرق وسطی

نطنز واقعے میں کسی حکومت کا ہاتھ ہوا تو تہران سخت جواب دے گا: ترجمان وزارت خارجہ

ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ امریکی حکومت بین الاقوامی اداروں پر اپنے تسلط کے سبب اپنی غیرقانونی پالیسیوں کو آگے نہیں بڑھا سکتی اور اس ملک کے صدر کی سوچ کے برخلاف قانون کی حکمرانی کا دور ختم نہیں ہوا ہے۔

ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان سید عباس موسوی نے پیر کو ہفتے وار پریس کانفرنس میں چودہ جولائی دوہزار پندرہ کو ہونے والے ایٹمی سمجھوتے کی مناسبت سے کہا کہ امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے بر سر اقتدار آنے سے پہلے تک ایٹمی سمجھوتے میں پائے جانے والے بعض مسائل میں توازن تھا لیکن ٹرمپ کے بر سر اقتدار آنے کے بعد امریکی حکومت ایٹمی سمجھوتے سے باہر نکل گئی اور ایران کے خلاف دو مرحلوں میں پابندیاں عائد کر کے ان پر عمل درآمد شروع کر دیا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close