ایرانمشرق وسطییورپ

امریکہ کو ایران کےخلاف پابندیوں کا از سر نو نفاذ کا کوئی حق نہیں : ایران

ایران کے وزیر خارجہ نے آج جمعرات کو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کےصدر کے نام ایک خط میں جوہری معاہدے سے امریکہ کے غلط فائدہ اٹھانے کو ناقابل قبول قرار دیتے ہوئے کہا کہ امریکہ کو یہ حق نہیں پہنچتا کہ وہ پابندیوں کو قابل اجراء بنانے کیلئے کوشش کرے۔

فارس خبر رساں ایجنسیی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے سربراہ کے نام میں ایک خط میں امریکہ کیجانب سے ایران مخالف امریکی پابندیوں کا از سر نو نفاذ کرنے کیلئے جوہری معاہدے کے تحت اسنیپ بیک میکنزم کے استعمال کے غیر قانونی اقدام کو مسترد کر دیا۔

جواد ظریف نے اس بات پر زور دیا کہ امریکہ کو ایران کیخلاف پابندیوں کا از سر نو نفاذ کرنے کا کوئی حق نہیں ہے لہذا سلامتی کونسل اور بین الاقوامی برادری کو امریکہ کے اس اقدام کو مسترد کرنا ہوگا۔

ایرانی وزیر خارجہ نے اس خط میں اس بات پر تاکید کی کہ اس سے پہلے منسوخ قرار دادوں کی بحالی سے امریکی وضاحت میں کسی بھی قسم کی صداقت یا قانونی حیثیت کا فقدان ہے اور انہیں اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے ذریعہ مسترد کردیا جانا چاہئے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close