مشرق وسطییمن

یمن کے صوبے مآرب پر سعودی بمباری

جارح سعودی اتحاد کے جنگی طیاروں نے یمن کے صوبے مآرب پر شدید بمباری کر کے عام شہریوں کو شدید نقصان پہنچایا ہے۔

یمن کے صوبے مآرب میں جارح سعودی اتحاد کے جنگی طیاروں نے المجزرہ علاقے پر بتّیس بار شدید بمباری کی جس میں رہائشی علاقوں کو بھاری نقصان پہنچا۔ سعودی عرب کے توپ خانے اور میزائل یونٹ نے بھی صوبے صعدہ کے علاقوں رازح اور شدا کے رہائشی علاقوں کو نشانہ بنایا۔

جارح سعودی اتحاد نے اتوار اور پیر کی درمیانی رات ایک بار پھر یمن کے مغربی علاقے الحدیدہ میں فائربندی کی خلاف ورزی کرتے ہوئے گولہ باری کی۔ آئی آر آئی بی کی رپورٹ کے مطابق جارح سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں نے یمن کے مغربی شہر الحدیدہ کے بین الاقوامی ایر پورٹ پر حملہ کیا۔ ابھی تک جارح سعودی اتحاد کی اس جارحیت میں ہونے والے جانی اور مالی نقصانات کی تفصیلات سامنے نہیں آسکی ہیں-یہ حملے ایسی حالت میں جاری ہیں کہ اس سے قبل یمن کے صوبے الحدیدہ میں بین الاقوامی فوجی امور کی کوآرڈینیشن کمیٹی کے رکن محمد القادری نے الحدیدہ میں جنگ بندی کے باوجود سعودی اتحاد کی خلاف ورزی جاری رہنے پر اقوام متحدہ اور سلامتی کونسل پر کڑی تنقید کی تھی۔

اٹھارہ دسمبر دو ہزار اٹھارہ کو اسٹاک ہوم میں یمنی فوج اور جارح سعودی اتحاد کے درمیان الحدیدہ صوبے میں جنگ بندی پر اتفاق ہوا تھا لیکن جارح سعودی اتحاد نے کبھی بھی اس معاہدے کا احترام نہیں کیا-

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close