دنیایورپ

امریکہ اور اسرائیل کا چولی دامن کا ساتھ

امریکا اور اسرائیل نے یونیسکو کی رکنیت چھوڑ دی۔

امریکا اور اسرائیل نے اقوام متحدہ کے ادارے یونیسکو کی رکنیت چھوڑ دی ہے، دونوں ملکوں نے یہ الزام عائد کیا کہ یونیسکو اسرائیل مخالف تعصب کو فروغ دے رہا ہے ۔

دونوں ممالک نے نئے سال کا آغاز ہوتے ہی اقوام متحدہ کے تعلیم، سائنس اور ثقافت سے متعلق ادارے کو باضابطہ طور پر چھوڑ دیا ہے ،یونیسکو چھوڑنے کا نوٹس ٹرمپ انتظامیہ نے اکتوبر 2017ء میں دیا تھا ۔ بعد میں اسرائیل کے وزیراعظم نیتن یاہو نے بھی ایسا ہی کیا ۔

یونیسکو نے مقبوضہ بیت المقدس میں قدیم مقامات کو فلسطینیوں کا ثقافتی ورثہ قرار دے کر 2011 ء میں فلسطین کو مکمل رکنیت دی تھی ، اس فیصلے کے بعد امریکا اور اسرائیل نے یونیسکو کو فنڈز کی فراہمی روک دی تھی ، امریکا نے یونیسکو میں بنیادی اصلاحات کا مطالبہ کیا ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button